حوصلہ

مانسہرہ، جہاں میں رہائش پزیر ہوں، میرا آبائی قصبہ نہ سہی، آبائی ضلع ضرور ہے، کیونکہ میرا تعلق بالاکوٹ سے ہے، لیکن میرے لیے آپ بالاکوٹ اور مانسہرہ کوایک ہی سکے کے دو رخ سمجھ سکتے ہیں۔
حوصلہ میرا یہ ہے کہ میں جی پی آر ایس کے انٹرنیٹ کنکشن کی مدد سے بلاگنگ کرنے اور اپنے بلاگ کو پہتر بنانے کے ساتھ ساتھ آج کل دوستوں کے انتہائی وزنی بلاگز کو سر کر رہا ہوں، یہ انتہائی تکلیف دہ عمل ہے، کیونکہ یہاں مانسہرہ میں ڈی ایس ایل یا اس قماش کی تیز انٹرنیٹ کی سہولت فی الوقت میسر نہیں ہے۔ خیر، بقول میرے بڑے بھائی مسرور خان بنگش، اگر میں یہ کہوں کہ اس طور کے انٹرنیٹ کنیکشن پرکچھ سر انجام دینے کے لیے صبر ایوب اور عمر نوح چاہیے تو بے جا نہ ہو گا۔
ستم ظریفی تو یہ ہے کہ میں اپنی نوٹ بک پر اس وقت یہ تحریر اندھیرے میں کی بورڈ کے اوپر کسی الو کی طرح اکڑوں بیٹھ کر انتہائی توجہ سے لکھ رہا ہوں، کیونکہ آج کل ہمارے یہاں بجلی منظر سے ایسے غائب ہے جیسے کہ بارش اور برفباری کی وجہ سے سورج کئی دنوں سے روپوش ہو۔
خدا ہی میرا حامی و ناصر ہو،
بجلی اور تیز انٹرنیٹ کی سہولت کی یاد میں

-000-

اس تحریر کو شئیر کریں
صلہ عمر سوشل میڈیا
صلہ عمر پر دوسری تحاریر