داڑھی کس نے تاڑی

ٹھیک ہے میں نے چہرے پر داڑھی سجا لی، مستحسن بات ہے، مجھے مولوی کیوں کہتے ہو؟ میں قاری کیوں کہلاتا ہوں؟ اور راہ چلتے مجھ سے وقت پوچھنے کے بہانے مجھے "صوفی صاحب" کہہ کر کیوں چھیڑتے ہو؟ اساتذہ کرام مجھے کلاس میں متوجہ کرنے کو طنزاً "حاجی صاحب" کیوں پکارتے ہیں؟ اجی میں کچھ ایسا بھی نیک پرہیزگار نہیں ہوں کہ مجھے "مولانا" کہا جائے، لیکن صرف مجھے ہی دوست ایسا کیوں کہتے ہیں؟ جب میں ان "داڑھی منڈھوں" کو نصیحت کرتا ہوں۔ ہاں مجھے پینٹ شرٹ پہننے میں کوئی دلچسپی نہیں ہے، میں شلوار قمیص میں پرسکون محسوس کرتا ہوں، تو مجھے لوگ فیشن سے پرے ایک عجوبہ کیوں سمجھتے ہیں؟ میں اسلام آباد کے ٹھنڈے میٹنگ ہالوں میں کیوں ترچھی نگاہوں سے دیکھا جاتا ہوں؟
چلیں مان لیا کہ میرا چلنے کا انداز خالصتاً پینڈو ہے، تو اس سے ایسی کون سی قیامت گر پڑتی ہے کہ مجھے چلتے ہوئے صاحبان گردنیں توڑتوڑ کر دیکھیں؟ چمچ کانٹے سے کھانے کا مجھے تجربہ کم ہے تو کیا میں محفلوں میں بھوکا بیٹھا رہوں یا اپنے ہم نفسوں کی طرح ٹشو پیپر اور کانٹے سنبھالنے کے چکر میں تکہ بوٹی سے محروم ہو جاؤں؟ کھانا کھایے صاحب، آپ کو کیا پڑی ہے کہ کوئی ہری مرچ کیوں کرچ کرچ کر کے کھا رہا ہے؟
صاحبان، میں بڑی سبکی محسوس کرتا ہوں، محفلوں میں صرف اس لیے اظہار خیال نہیں کر پاتا کہ میری رائے سننے سے پہلے ہی مجھ پر "خبطی روحانیت پسند" کا ٹھپا لگ جاتا ہے۔ مجھے بتائیں حضور کہ اگر مجھے ٹائی کی سنگل اور ڈبل ناٹ سے آشنائی نہیں تو اس میں کیا قباحت ہے، امریکے کے جارج، ٹونی، جان کو بھی تو لنگ باندھنے کا سلیقہ نہیں!۔
مجھے پاپے ڈبو ڈبو کر کھانا اچھا لگتا ہے، تو کوئی ایسا ماما کیوں بنتا ہے کہ مجھے تہذیب سکھائے کہ بچے ایسے نہیں ایسے۔
سمجھائیے مجھے، نہ سمجھ سکوں تو پیٹ لیں، جن اساتذہ نے مجھے پیٹا تھا، دل کے اخلاص سے پیٹا ہے اور اچھے وقتوں میں ترس کھانے بغیر میرے "گِٹے سیک" دیے تھے، میرے لیے بڑے قابل احترام ہیں، دل کی اخلاص سے قدر کرتا ہوں۔
نہ صاحب نہ، مجھے ہمدردی نہیں چاہیے، میں نہیں چاہتا کہ یونیورسٹی کے چم چمکتے کمرے کی نرم کرسیوں پر بیٹھ کر اگر کسی کو یہ کہوں کہ "فلانی" (اپنی مرضی کی کوئی بھی ٹھیٹھ گالی لاگو کریں) قسم کا وائرس اپنی سمجھ نہیں آیا، تو مجھے ہمدردی سے نہ دیکھا جائے، نظریں یہ نہ کہیں "ہائے بیچارہ، نالائق، خبطی، اسے تو یہ بھی نہیں معلوم!"۔ بلکہ میں تو چاہتا ہوں کہ سکول کی طرح، ٹاٹ، سخت بینچ پر لاتوں کے بیچ میں سر پھنسا کر میرے سامنے تارے نچوا دیجیے یا انگلیوں میں "سونٹی" پھنسا کر میری روح قبض کر دیں مگر خدارا مجھے سمجھائیں کہ ایسا کیوں ہے؟

-000-

اس تحریر کو شئیر کریں
صلہ عمر سوشل میڈیا
صلہ عمر پر دوسری تحاریر