ہفتہ بلاگستان ۔ باورچی خانے میں احتیاط

کوئی انڈے پکا رہا ہے تو کوئی سبزیاں، کسی نے ہمارا دل ہلا دیا تصویریں بھی دکھا کر، یہاں تک کہ اتنی لمبی چائے پکی کہ ہم قہوہ پی پی کر اپنا معدہ جلاتے رہے۔ کسی نے مایوس کیا ہمیں اپنی جانی مانی قاتل ترکیبوں سے محروم کر کے تو کسی نے ہمیں ہوش بھی دلایا کہ اپنے اردگرد ضرورتمندوں کو بھی پوچھ لیجیے۔ اس سارے "خمیرہ گاؤ زبان" میں ہم منہ تک رہے ہیں کہ ہمیں کیا پکانا آتا ہے؟
ہمیں آپ سب باورچیوں کی خدمت میں کچھ گذارشات کرنی ہیں تا کہ ہمیشہ یہ کھابے جاری رہیں، اور آپ محفوظ بھی رہیں۔ نوٹ فرما لیں مندرجہ ذیل ٹوٹکے جو ہمیں "فوڈ مائیکروبیالوجی" اور "فوڈ ٹیکنالوجی" کے مضامین نے سکھائے۔
۔ بیکٹیریا ہر جگہہ پائے جاتے ہیں، یہ ثابت ہو چکا ہے کہ کھولتے پانی، اور یخ برف میں بھی یہ پائے گئے ہیں۔ باورچی خانے میں صفائی کا خاص خیال رکھیں۔
۔ فریز کیے گئے اجزاء کو احتیاظ سے استعمال کیجیے، ایک بار جب کوئی چیز فریزر سے نکال لیں تو اس کو پندرہ منٹ کے اندر اندر پکانا شروع کر دیں۔ پندرہ منٹ بعد اس میں عام تناسب سے زیادہ بیکٹیریا پرورش پانا شروع کر دیتے ہیں۔ پرورش پانے والے بیکٹیریا کی قسمیں صحت کے لیے نہایت مضر ہوتی ہیں۔
۔ کوئی بھی چیز جب آپ فریزر سے نکال لیں، اس کو مکمل طور پر استعمال کریں۔ بچ جانے والی اشیاء کو دوبارہ فریز کرنے سے گریز کریں۔ یہ "فوڈ پوائزننگ" کا بڑا ذریعہ ثابت ہو سکتے ہیں اور فریزر میں موجود دوسری اشیاء کو خراب کرسکتے ہیں۔
۔ کھانے پینے کی اشیاء کو پانچ یا سات دن سے زیادہ فریزر میں نہ رکھیں۔
۔ مرغیوں کی کئی خطرناک بیماریاں جیسے برڈ فلو سے بچنے کے لیے کھانوں کو کم از کم اسی ڈگری سینٹی گریڈ پر پکائیں، یا گرم کریں۔
۔ کھانا پکاتے وقت استعمال ہونے والے پانی کو استعمال سے پہلے ابال لیں، یعنی سو سینٹی گریڈ پر گرم کریں، یہ آپکو "ای کولائی" اور "پاسٹوریلا" جیسے بیکٹیریا جو پانی میں عام پائے جاتے ہیں سے محفوظ رہ سکتے ہیں۔ صرف فلٹر کرنے سے یہ بیکٹیریا ختم نہیں ہوتے۔
۔ ڈبا پیک خوراک کو استعمال کرتے ہوئے احتیاط کریں۔ ڈبا کھولنے کے بعد اس کو فریزر میں رکھیں، استعمال سے پہلے ہدایات کا خیال رکھیں۔

-000-

اس تحریر کو شئیر کریں
صلہ عمر سوشل میڈیا
صلہ عمر پر دوسری تحاریر